بلوچستان کے بلدیاتی انتخابات میں آزاد امیدوار آگے، جے یو آئی دوسرے نمبر پر

بلدیاتی الیکشن 2022

بلوچستان کے بلدیاتی انتخابات میں آزاد امیدوار آگے، جے یو آئی دوسرے نمبر پر
(نیوز ڈیسک) بلوچستان میں منعقد ہونے والے حالیہ بلدیاتی انتخابات میں آزاد امیدواروں نے میدان مار لیا ہے جبکہ سیاسی جماعتوں میں جمعیت علمائے اسلام (ف) نے سبقت حاصل کی ہے

29 مئی کو بلوچستان کے 32 اضلاع میں بلدیاتی انتخابات کے لیے پولنگ ہوئی شہریوں نے ووٹنگ کے عمل میں بھر پور دل چسپی کا مظاہرہ کیا مردوں کے ساتھ ساتھ خواتین نے بھی بڑی تعداد میں اپنا حق رائے دہی استعمال کیا، غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کے مطابق آزاد امیدواروں نے اب تک 1222 نشستیں حاصل کی ہیں جے یو آئی (ف) 260 نشستوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہے بلوچستان کی حکمران جماعت بلوچستان عوامی پارٹی (باپ)141 نشستوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہے

جبکہ پشتونخوا میپ نے 94 ،نیشنل پارٹی نے64اور بی این پی مینگل 54 نشستوں پر کامیابی حاصل کر پائی ہے پاکستان پیپلز پارٹی صرف 47 اور پی ٹی آئی محض 20 نشستیں جیت پائی ہے علاوہ ازیں عوامی نیشنل پارٹی کے حصے میں 19،جمہوری وطن کے حصے میں 17اور مسلم لیگ ن کے حصے میں صرف 15 نشستیں آسکی ہیں دوسری طرف مکران ڈویژن میں حال ہی میں وجود میں آنے والی تحریک” حق دو پارٹی” کو برتری حاصل ہوئی ہے

تجزیہ کاروں کے مطابق بلوچستان کے بلدیاتی انتخابات میں آزاد امیدواروں کا اکثریت حاصل کرنا صوبے کی سیاسی جماعتوں کے لئے اچھا شگون نہیں ہے انتخابی نتائج سے ظاہر ہوتا ہے کہ بلوچستان کے عوام کا سیاسی جماعتوں پر اعتماد کم زور پڑ چکا ہے سیاسی جماعتوں کو اس الیکشن سے بہت کچھ سیکھنے اور اپنی پالیسیوں پر نظر ثانی کی ضرورت ہے

Be the first to comment

Leave a Reply