کراچی میں 10 ہزار سی سی ٹی وی کیمرے لگائے جائیں گے

کراچی میں 10 ہزار سی سی ٹی وی ٹی وی کیمرے لگانے کا منصوبہ
کراچی میں 10 ہزار سی سی ٹی وی کیمرے لگائے جائیں گے

راچی(نیوز ڈیسک) کراچی سیف سٹی پروجیکٹ کے تحت میٹروپولیس میں مرحلہ وار 10,000 سی سی ٹی وی کیمرے نصب کیے جائیں گے۔یہ اعلان ڈی جی سندھ سیف سٹی ڈاکٹر مقصود احمد نے گزشتہ روز “سیف سٹی” منصوبے کے افتتاح کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

پہلے مرحلے میں 4 ہزار،دوسرے مرحلے میں 6 ہزار کیمروں کی تنصیب ہوگی

ڈاکٹر مقصود احمد کا کہنا تھاکہ پہلے مرحلے میں شہر بھر میں 4000 اور دوسرے مرحلے میں 6000 کیمرے لگائے جائیں گے۔

سن 2016 سے تاخیر کا شکار سیف سٹی پروجیکٹ کا باقاعدہ افتتاح ہوگیا

یہ منصوبہ سپریم کورٹ کے حکم پر 2016 میں سندھ حکومت اور نیشنل ریڈیو ٹیلی کمیونیکیشن کارپوریشن کے اشتراک سے شروع کیا گیا تھا بعض وجوہات کی بنا پر جس پر عمل درآمد نہیں ہو پایا تھا 6 سال سےتاخیر کا شکار اس منصوبے کا باقاعدہ افتتاح جمعے کے روز کیا گیا۔

ڈی آئی جی سیکیورٹی اینڈ ایمرجنسی سروسز کو منصوبے کا اضافی چارج تفویض

ترجمان سیف سٹی کے مطابق جنوری 2022 میں ڈی آئی جی سیکیورٹی اینڈ ایمرجنسی سروسز ڈویژن مقصود احمد کو ڈی جی سندھ سیف سٹیز اتھارٹی کا اضافی چارج دیا گیا تھا تھا۔ جس کے منصوبے پر عمل درآمد میں اچھی پیش رفت ہوئی ہے۔

منصوبے پر 22 ارب روپے خرچ ہوں گے،پروجیکٹ ترجمان

ترجمان سیف سٹی پروجیکٹ کا مزید کہا تھا کہ پہلے تمام اسٹیک ہولڈرز نے طویل غور و خوض کے بعد منصوبے کا تخمینہ 44 ارب روپے لگایا تھا بعد میں اسے کم کر کے تقریباً 22 ارب روپے کر دیا گیا ہے۔ نئے تخمینے میں اس بات کا بھرپور خیال رکھا گیا ہے کہ منصوبہ پہلے سے بہتر معیار کا حامل ہو۔

ڈی جی سندھ سیف سٹیز اتھارٹی ڈاکٹر مقصود احمد کی طرف سے گزشتہ روز بلائے گئے اہم اجلاس میں سندھ سیف سٹیز اتھارٹی کے نمائندوں، این آر ٹی سی، ٹیکنیکل
کمیٹی کے اراکین اور پروجیکٹ کے تمام اسٹیک ہولڈرز نے شرکت کی۔
پاکستان میں تعلیم و تربیت کے مسائل

Be the first to comment

Leave a Reply