طلباء کو زبردستی کتابیں فروخت نہ کی جائیں ،ڈائریکٹوریٹ پرائیوٹ انسٹی ٹیوشن

طلباء کو زبردستی کتابیں فروخت نہ کی جائیں ،ڈائریکٹوریٹ پرائیوٹ انسٹی ٹیوشن
طلباء کو زبردستی کتابیں فروخت نہ کی جائیں ،ڈائریکٹوریٹ پرائیوٹ انسٹی ٹیوشن

طلباء کو زبردستی کتابیں فروخت نہ کی جائیں ،ڈائریکٹوریٹ پرائیوٹ انسٹی ٹیوشن

کراچی (ویب ڈیسک) پرائیوٹ اسکولوں کو زبردستی کتابیں ،اسٹیشنری اور یونیفارم وغیرہ فروخت کرنے سے روک دیا گیا ،ڈائریکٹوریٹ پرائیوٹ انسٹی ٹیوشن نے اسکولوں کو مراسلہ جاری کر دیا ۔

والدین کو طباعت شدہ اسٹیشنری وغیرہ خریدنے پر مجبور نہ کیا جائے

ڈائریکٹوریٹ پرائیوٹ انسٹی ٹیوشن کے مراسلے میں کہا گیا ہے کہ والدین کو طباعت شدہ سر ورق کی کاپیاں ،رجسٹر وغیرہ خریدنے کے لئے مجبور نہ کیا جائے ، اس کی جگہ اسکول انتظامیہ والدین اور طلباء کو اسکول کا نام ظاہر کرنے والے اسٹیکرز فراہم کریں تاکہ اسکول کی کتابوں ،کاپیوں وغیرہ پر چسپاں کیا جا سکے ۔

اسکولز کسی خاص دکان کی تجویز نہ دیں تاکہ طلباء اوپن مارکیٹ سے خریداری کر سکیں

مزید ہدایت کی گئی ہے کہ والدین اور طلباء کو کسی خاص دکان سے کتابیں ،یونیفارم وغیرہ خریدنے کا پابند نہ کیا جائے ، کتابوں ،اسٹیشنری وغیرہ کی فہرست نتائج کے اعلان کے موقع پر یا داخلے کے وقت طلباء کو جاری کی جائے ،یہ چیزیں اسکول سے خریدنے کے لئے رقم کا مطالبہ نہ کیا جائے تاکہ طلباء اور ان کے والدین اگر اوپن مارکیٹ سے یہ چیزیں سستے داموں خریدنا چاہیں تو خرید سکیں ۔

کلر ڈے ودیگر عنوانات سے طلباء اور والدین سے رقم کا مطالبہ نہ کیا جائے

مراسلے میں تاکید کی گئی ہے کھانے پینے کی اشیاء ،اور مختلف دنوں کے عنوان سے رقم مانگ کر طلباء کو تنگ نہ کیا جائے جیسے مدر ڈے ،فادر ڈے،مینگوڈے،کلرڈے،فلاور ڈے جیسے عنوانات سے غریب والدین سے رقم مانگنے کی شکایات عام ہیں ۔

منظور شدہ فیس نوٹس بورڈ پر آویزاں کرنے ، مطالبے پر والدین کو فراہم کرنے کی ہدایت

اسکولوں سے کہا گیا ہے کہ وہ صرف منظور شدہ فیس وصول کریں اور فیس نوٹس بورڈ اور استقبالیہ پر چسپاں کریں اگر والدین کی طرف سے منظور شدہ فیس دکھانے کا مطالبہ کیا جائے تو انہیں فراہم کیا جائے ، مزید کہا گیا ہے کہ پانچ سال سے پہلے کوئی اسکول یونیفارم تبدیل نہیں کر سکتا ۔

تین ماہ سے کم عدم ادائیگی پر طلباء کو ڈانٹنے سمیت کوئی بھی سزا نہ دینے کی تاکید

یہ بھی ہدایت کی گئی ہے کہ تین ماہ سے کم مدت کی فیس ادا نہ کرنے پر کسی طالب علم کو کسی بھی قسم کی سزا نہ دی جائے جیسے اسکول سے اخراج ، ڈانٹ ڈپٹ کرنا ، طالب علم کو کھڑا کرنا اور اٹھک بیٹھک کرانا وغیرہ ۔

جامعہ الازہر،دنیا کی دوسری قدیم ترین یونیورسٹی

Be the first to comment

Leave a Reply